ثمینہ راجا

 

آج مورخہ 30 اکتوبر پاکستان کی معروف شاعرہ، مدیرہ، براڈ کاسٹر ثمینہ راجہ کی برسی ہے۔

ثمینہ راجا  11 ستمبر 1961 کو رحیم یار خان میں پیدا ہوئیں۔ ایم اے (اردو ادبیات) میں نمایاں کامیابی حاصل کی۔ گھریلو روایات سے انحراف کرتے ہوئے یعنی جاگیردارانہ نظام کی مخالفت کرتے ہوئے آپ نے بہت کم سنی یعنی گیارہ برس کی عمر سے شاعری شروع کردی اور جلد ہی آپ کا کلام برصغیر کے ممتاز ادبی جرائد کی زینت بنا۔ آپ کا پہلا مجموعہ کلام ’’ہویدا‘‘ 1995 کو شائع ہوا۔ 1998میں آپ نیشنل بک فاؤنڈیشن کے ادبی پرچے ’’کتاب‘‘ کی مدیرہ ہوئیں۔ اس کے علاوہ مختلف ادبی رسالوں کی مدیرہ رہیں۔

ثمینہ راجا ایک درجن کے قریب شعری مجموعوں کی خالق ہیں جن میں ہویدا، شہرِ رسا، وصال، خوبنائے، باغِ شب، باز دید، پری خانہ، ہفت آسمان، عدن کے راستے پر، دل لیلٰی، عشق آباد، کلیات ثمینہ راجا (دو جلدیں) وغیرہ شامل ہیں۔

ثمینہ راجا کینسر کے موذی مرض میں مبتلا ہوکر 30 اکتوبر 2012 کو اسلام آباد میں وفات پاگئیں ۔


Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter