• سحر اس جھمک سے آیا نظر اک نگار رعنا
    کہ خود اس کے حسن رخ کو لگا تکنے ذرہ آسا
    نظیر
  • ہیں ایک پیش خالق عالم حسن حسین
    ماتم میں شیعہ کہتے ہیں باہم حسن حسین
    دبیر
  • حسن بیاں یہ جتنے جواں تھے اچھل پڑے
    جو جو مسن تھے ان کے تو آنسو نکل پڑے
    مراثی
  • خط کھورہا ہے اس رخِ روشن کی آب و تاب
    دن آفتابِ حسن پہ آئے زوال کے
    امانت
  • چار دن کی چاندنی ہے پھر اندھیرا پاکھ ہے
    سچ تو یہ ہے، ہے یہ سارا حسن کا عالم غلط
    انشا
  • پھیکا کریں گے حسن مہ نو کو چرخ پر
    بحث ابرووں کو مدمقابل کے ساتھ ہے
    الماس درخشاں
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 81

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter