Shair

شعر

آنکھوں میں بھرے اشک یہ لڑکی جو ہے خاموش
کرتے پہ لہو جس کے ہے زخمی ہے بن گوش

(انیس)

جب لڑکا لڑکی راضی ہے
تو قاضی کیوں اعتراضی ہے

(دلاور)

سانپاں کوں کرے دنگ تری لڑکی جھلی نے
تجھ زلف کا بستار لکھا آج ولی نے

(ولی)

بہت عجیب سی لڑکی ہے اس کی خاطر میں
پڑھے بغیر حسینوں کے خط جلادوں گا

(بشیر بدر)

ایک لڑکی بہت سے پھول لیے
دل کی دہلیز پر کھڑی ہوگی

(بشیر بدر)

سانپاں کوں کرے دنگ تری لڑکی جھلی نے
تجھ زلف کا بستار لکھا آج ولی نے

(ولی)

First Previous
1 2
Next Last
Page 1 of 2

Poetry

Pinterest Share