• صبر کی سل غم اولاد میں دل پر دھر لوں
    کیسے ماں ہو کے بھلا چھاتی کو پتھر کرلوں
    شمیم
  • ماں ہوں میں کلیجا نہیں سینےمیں سنبھلتا
    صاحب مرے دل کو ہے کوئی ہاتھوں سے ملتا
    انیس
  • سو ماں باپ کوں شہ دلاسا دے کر
    چلیا اپنے معشوق کے شہر ادھر
    قطب مشتری
  • ماں باپ کو رحت نہیں اک آن مرے بن
    پر جان کا صرفہ میں کروں یہ نہیں ممکن
    انیس
  • جنی ماں اپن مہر سوں آئے کر
    کہی شاہ توں یوں سواں کھائے کر
    قطب مشتری
  • گرمی میاں ماں بچاۓ تن کی بھاپ سے
    وہ پسلیاں شکستہ ہوں گھوڑوں کی ٹاپ سے
    انیس
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 14

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter