Shair

شعر

جھگڑے لگے ہیں یوں تو بہت آدمی کے ساتھ
یا رب نہ ہو کسی کو محبت کسی کے ساتھ

(داغ)

باغ دل میں تج محبت کا اچنبا پھل لگیا
باس سنگ پھولاں عرق کا میں ہوا ہوں ڈگمگیا

(قلی قطب شاہ)

رنگ نکھرے گا آدمیت کا
ہم سہارا تو لیں محبت کا

(تذکرہ شعرائے بدایوں)

لگ کے پھر دل نہ بجھے جس سے تنک لاگ لگے
گر یہی کچھ ہے محبت تو اسے آگ لگے

(قائم)

چھوڑ دے سب کی مؤدت
ہم سے رکھ دل کی محبت

(نظیر)

رفاقت تو دنیا میں پیدا نہیں
نبھی جائے یہ بھی محبت ہے شاذ

(بے نظیر)

First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 71

Poetry

Pinterest Share