• قائم وطن کے بیچ تو آسودگی نہ ڈھونڈو
    پر خار گلستان میں ہمیشہ ہیں پائے گل
    قائم
  • دار فانی سے ہے فسردہ مزاجی حاصل
    سبزہ دشت نہ گلزار وطن کی خواہش
    نسیم دہلوی
  • ہم نے جب وادی غربت میں قدم رکھا تھا
    دور تک یادِ وطن آئی تھی سمجھانے کو
    وحید الہ بادی
  • مطلب نہیں جہاں کے سیاہ و سفید سے
    یکساں ہے شام غربت و صبح وطن مجھے
    الماس درخشاں
  • بس حُب وطن کا جپ چکے نام بہت
    اب کام کرو، کہ وقت ہے کام کا یہ
    حالی
  • کیا پھرے وہ وطن آوارہ گیا اب سو ہی
    دل گم کر دہ کی کچھ خیر خبر مت پوچھو
    میر
First Previous
1 2 3 4 5 6 7 8 9 10
Next Last
Page 1 of 11

Android app on Google Play
iOS app on iTunes
googleplus  twitter